[REQ_ERR: OPERATION_TIMEDOUT] [KTrafficClient] Something is wrong. Enable debug mode to see the reason. گورنربلوچستان کا صوبے بھر میں رضاکاروں کی تعداد بڑھانے اور ریلیف کی سرگرمیوں کو دیگر اضلاع تک وسعت دینے کی ہدایت – Daily Ahem Khabar

گورنربلوچستان کا صوبے بھر میں رضاکاروں کی تعداد بڑھانے اور ریلیف کی سرگرمیوں کو دیگر اضلاع تک وسعت دینے کی ہدایت

کوئٹہ : گورنربلوچستان امان اللہ خان یاسین زئی نے کہا ہے کہ کسی بھی ہنگامی صورتحال اور قدرتی آفات کے دوران خدمت خلق کا جذبہ بہت موثر رہتا ہے.

انہوں نے کہا کہ ہلال احمر بلوچستان کی جانب سے عالمی وبا کوویڈ-نائنٹین اور حالیہ بارشوں سے متاثرہ علاقوں میں لوگوں کو امدادی سامان کی بروقت ترسیل لائق تحسین ہے.

ان خیالات کا اظہار انہوں نے سومو ار کے روز گورنر ہاوس کوئٹہ ہلال احمر بلوچستان کی کارکردگی سے بریفنگ کے دوران کیا. اس موقع پر ہلال احمر بلوچستان کے چیئرمین ایڈوکیٹ اکرم شاہ بھی موجود تھے۔گورنر یاسین زئی نے کہا کہ صوبے بھر میں رضاکاروں کی تعداد بڑھانے اور ریلیف کی سرگرمیوں کو دیگر اضلاع تک وسعت دینے کی ہدایت کی۔

گورنربلوچستان نے ریڈ کریسنٹ سوسائٹی بلوچستان کی ٹیم اور اسکے رضاکاروں پر زور دیا کہ وہ اپنے ادارے کی کارکردگی کو مزید بہتر بنانے کیلئے تمام دستیاب وسائل کو بروئے کار لائیں۔

گورنر بلوچستان امان اللہ خان یاسین زئی نے کہا ہے کہ کسی بھی سرکاری ادارے کے اچانک دورہ کرنے سے ہی اسکی کارکردگی، عملے کی حاضری اور صفائی کی صورتحال کو بہتر طور پر جانچا اور پرکھا جاسکتا ہے۔

گورنر یاسین زئی نے دو ٹوک الفاظ میں واضح کر دیا کہ وقتاً فوقتاً اچانک دوروں کا سلسلہ جاری رہیگا اور غیرحاضر ملازمین اور غفلت برتنے والوں کے خلاف سخت سے سخت کارروائی کی جائے گی.

ان خیالات کا اظہار انہوں نے سموار کے روز یونیورسٹی آف بلوچستان کے اپنے اچانک دورے کے موقع پر کیا۔ گورنر بلوچستان نے یونیورسٹی کے دورے کے موقع پر یونیورسٹی کی جانب سے اساتذہ اور طلبہ کو فراہم کی جانے والی سہولیات، صفائی ستھرائی کے انتظامات، میل ہاسٹلز، یونیورسٹی کے احاطے میں زیر تعمیر واٹر ٹینک اور ڈیجٹل لائبریری کا معائنہ کیا.

گورنر یاسین زئی نے کہا کہ اگرچہ یونیورسٹی کے امور و معاملات اور کارکردگی میں اب خاصی بہتری آئی ہے تاہم کارکردگی کی مزید بہتری کیلئے اقدامات اٹھائے جائے. انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ اساتذہ اور زیرتعلیم اسٹوڈنٹس کو میرٹ پر ہاسٹلز الاٹ کیئے جائے۔

انہوں نے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر شفیق الرحمن کو ہدایت کی کہ فرائض کی عدم ادائیگی اور غیر حاضر رہنے کی صورت میں بلاامتیاز قانونی کاروائی کی جائے۔ گورنر یاسین زئی نے محدود وسائل کے باوجود تعلیمی معیار کو بلند کرنے اور صحتمند ماحول کو فروغ دینے کیلئے اٹھائے گئے اقدامات اور اساتذہ اکرام کے جذبے کو سراہا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *